0

پرویز الہٰی نے جنرل باجوہ سے متعلق مونس الہٰی کے بیان کی تصدیق کردی

Samis News Islamabad

وزیر اعلیٰ پنجاب چوہدری پرویز الہٰی نے اپنے صاحبزادے مونس الہٰی کے جنرل (ر) قمر جاوید باجوہ سے متعلق بیان کی تصدیق کردی۔

چوہدری پرویز الہٰی کا کہنا ہے کہ ن لیگ کی طرف جاتے جاتے اللّٰہ نے راستہ تبدیل کیا اور راستہ دکھانے کے لیے اللّٰہ نے باجوہ صاحب کو بھیج دیا۔

نجی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے مونس الہٰی کے بعد پرویز الہٰی نے بھی کہہ دیا کہ عمران کا ساتھ دینے کے لیے آرمی چیف جنرل (ر) قمر جاوید باجوہ نے کہا تھا۔

انہوں نے کہا کہ شریفوں سے متعلق ہمیشہ خدشہ تھا وہ جھوٹ بولتے تھے، شریفوں کے ساتھ 18 سال رہا وہ ہمارے ساتھ ہمیشہ جھوٹ بولتے تھے، میں کہتا تھا شریف مجھے کام کرنے نہیں دیں گے، میں یہ بھی کہتا تھا جو کچھ صوبے کےلیے کرنا چاہتا ہوں وہ شریف کرنے نہیں دیں گے۔

پرویز الہٰی نے بتایا کہ ادارے سے بات ہوئی تو انہوں نےکہا کہ آپ خود سوچ لیں آپ کےلیے کیا بہتر ہے، ادارے کو بتایا کہ عمران خان کے ساتھ ہماری کس طرح بات ہوئی ہے، تو کہا گیا یہ عزت والا اور بہتر راستہ ہے، یہ ان کی مہربانی ہے ہمیں نہ بھی بتاتے تو ہمیں کیا کرنا تھا۔

انہوں نے کہا کہ جب بات ہوتی ہے تو ہم اداروں سے مشورہ کرتے ہیں، جتنے بھی ادارے کے سربراہ رہے ہیں، ہم نے سب کو سپورٹ کیا ہے، کبھی کسی کے خلاف بیان نہیں دیا۔

 پرویز الہٰی نے کہا کہ چوہدری شجاعت کی باجوہ صاحب سے کوئی بات نہیں ہوئی، نہ عمران خان نے ڈبل گیم کھیلی ہے نہ باجوہ صاحب نے، حالات واقعات آپ کو ایسی جگہ پر چھوڑ دیتے ہیں کہ آپ کے پاس فیصلہ لینے کا راستہ نہیں ہوتا، فیصلہ صحیح اور غلط ہوسکتا ہے، میرا خیال ہے عمران خان کا بھی صحیح فیصلہ تھا ہمارا اور پارٹی کا بھی صحیح تھا۔


اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں